Posted by: Bagewafa | اپریل 9, 2018

میں کیسا مسلماں ہوں بھائی؟۔۔۔۔۔حسین حیدری

میں کیسا مسلماں ہوں بھائی؟۔۔۔۔۔حسین حیدری

سڑک پر سگریٹ پیتے وقت جو اذاں سنائی دی مجھ کو

تو یاد آیا کے وقت ہے کیا اور بات ذہن میں یہ آئی

میں کیسا مسلماں ہوں بھائی؟

میں شیعہ ہوں یا سنی ہوں، میں خوجہ ہوں یا بوہری ہوں

میں گاؤں سے ہوں یا شہری ہوں، میں باغی ہوں یا صوفی ہوں میں قومی ہوں یا ڈھونگی ہوں

میں کیسا مسلماں ہوں بھائی؟

میں سجدہ کرنے والا ہوں، یا جھٹکا کھانے والا ہوں

میں ٹوپی پہن کے پھرتا ہوں، یا داڑھی اڑا کے رہتا ہوں

میں آیت قول سے پڑھتا ہوں، یا فلمی گانے رمتا ہوں

میں اللہ اللہ کرتا ہوں، یا شیخوں سے لڑ پڑتا ہوں

میں کیسا مسلماں ہوں بھائی؟

میں ہندوستانی مسلماں ہوں

دکن سے ہوں،یوپی۔ سے ہوں ،بھوپال سے ہوں،

دلہی سے ہوں بنگال سے ہوں

گجرات سے ہوں،ہر اونچی نیچی جات سے میں ہندوستانی مسلمان ہوں

دکن سے ہوں،یو۔ سے ہوں،بھوپالسے ہوں ،

دلہی سے ہوں بنگال سے ہوں

گجرات سے ہوں،ہر اونچی نیچی جات سے ہوں ۔

میں ہی جلاہا موچی بھی،

میں داکٹر بھی،درجی بھی

”مجھ میں گیتا کا سار بھی ہے

ایک اردو کا اخبار بھی ہے

میرا ایک مہینہ رمضان بھی ہے

مین نے کیا گنگا سنان بھی ہے

اپنے ہی طور سے جیتا ہوں

دارو،سیگریٹ بھی پیتا ہوں

کوئی نیتا میری نس نس میں نہی

میں کیسی کے بس میں نہیں

میں ہندوستانی مسلماں ہوں

خونی دروازہ مجھ میں ہے

بھول بھلییا مجھ میں ہے

میں بابری کا ایک گنبد ہوں

میں شہر کی بیچ میں سرحد ہوں

جھگیوں میں پلتی غربت میں

مدرسوں کی طوطی چھت میں

دنگو میں بھڑکتا شولہ میں

کرسی پر خون کا دھبہ میں

میں ہندوستانی مسلمان ہوں

مندر کی چوکھت میری ہے مسجد کے قبلے میرے ہے

گردوارکا دربار مینرا،ایسو کے گرجے میرے ہے

سو میں سے 14 ہوں لیکن

14 یہ کم نہیں پڑتے ہیں

میں پورے سو میں بستہ ہوں

پورے سو مجھ میں بستے ہیں”

مجھے ایک نظر سے دیکھ نہ تو

میرے ایک نہی سو چہیرے ہے

سو رنگ کے کردار ہے میرے

سو قلم سے لیکھی کہانی میری

میں جتنا مسلماں ہوں بھائی

اتنا ہندوستانی ہوں۔

Advertisements

زمرے

%d bloggers like this: